خیبرپختونخوا آراکین اسمبلی کا احتجاج رنگ لے آئی خیبر پختونخوا میں سی این جی پمپس کھلے رہینگے،امجد افردی

پشاور ( دی خیبرٹائمز جنرل رپورٹنگ ڈیسک ) پاکستان پیپلز پارٹی خیبر پختونخوا اسمبلی رکن اورپی پی پی کے سیکرٹری اطلاعات امجد افریدی نے سی این جی اسٹیشنز بند کرنے کے خلاف اسمبلی اجلاس میں احتجاج کیا تھا، کہ سی این جی اسٹیشنز کی بندش ذیادتی ہے، اس سلسلے میں خیبرپختونخوا اسمبلی کے سپیکر کی سربراہی میں آراکین اسمبلی نے جی ایم سوئی گیس تاج علی خان کو اسمبلی سیکرٹریٹ میں طلب کیا، اس دوران امجد افریدی نے بتایا کہ خیبرپختونخوا میں سی این جی اورصنعتوں کو 26 جون سے گیس بندکردی گئی ہے،
صوبہ میں گیس کا پیداوار 500 ایم ایل سی ہے جبکہ 250 ایم ایل سی استعمال کرتے ہیں، ان کا کہنا تھا کہ خیبرپختونخوا کے گیس پر پنجاب میں صنعتیں چلتی ہیں، پہلے صوبے کی ضروریات پوری کرنے کے بعد دیگر صوبوں کو گیس کی سپلائی دی جائے، امجد افریدی کا یہ بھی کہنا تھا کہ پنجاب جب چاہے آٹا بند کردیتا ہے، پھر ہم کیوں اپنے وسائل کے ہوتے ہوئے محرومی کا شکار ہیں؟ پی ٹی آئی کےصوبائی وزیر شوکت یوسفزئی نے بتایا کہ گیس لوڈ شیڈنگ نہ کرنے کا عدالتی فیصلہ ہے، اس کے بعد لوڈ شیڈنگ کا پیدا ہونا سمجھ سے بالاتر ہے؟ جی ایم سوئی گیس تاج علی نے صنعتوں اور سی این جی پمپس کو فوری طور پر گیس کی فراہمی کی یقین دہانی دی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں